ریفری کی غلطیاں ایک بار پھر بھارت بمقابلہ پاکستان کو فائدہ پہنچاتی ہیں۔

12

اتوار کو آئی سی سی ویمنز ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں بھارت کی پاکستان کے خلاف سات وکٹوں سے جیت ریفری کی ایک متنازعہ غلطی کی وجہ سے متاثر ہوئی۔

پاکستان کے خلاف ساتویں اننگز میں امپائر جیکولین ولیمز کی جانب سے غلطی سے ایک اضافی ساتویں گیند ڈالنے کی اجازت دینے کے بعد بھارت نے اننگز میں مزید چار رنز بنائے۔

ندا ڈار نے ہندوستان کی اننگز میں سات اوور کرائے ۔ یہ اننگز کی پہلی باؤنڈری پر جمائمہ روڈریگز نے لگائی۔

ورلڈ کپ میں جب بھی بھارت کا مقابلہ پاکستان سے ہوتا ہے تو ریفری ہمیشہ بھارت کے حق میں ہوتا ہے۔ آج پاکستان کو 7 گیندیں پھینکنی تھیں۔ اور اضافی گیند 4 رنز ہے۔ پاگل چیزیں 🤷‍♂️ #INDvPAK #T20 ورلڈ کپ 2023 pic.twitter.com/yICI221IQS

— ہارون (@hazharoon) 12 فروری 2023

جمائما نے 38 گیندوں پر 8 چوکوں سمیت 53 رنز بنا کر ناقابل شکست میچ جیتا۔

حالیہ دنوں میں یہ پہلا موقع نہیں ہے کہ کسی متنازعہ ریفری کے فیصلے نے پاک بھارت میچ کا رخ تبدیل کیا ہو۔

میلبورن میں 2022 مینز T20 ورلڈ کپ میں پاکستان کے خلاف بھارت کی قریبی جیت پر ویرات کوہلی کو 19 پر محمد نواز نے فل ٹاس دیا۔ویں اس نے اسے مڈ وکٹ اسٹینڈ میں گھسایا اور فوری طور پر فٹ امپائر، میل ایراسمس کو نو بال کا اشارہ کیا۔

میدان میں موجود دو امپائرز، راڈ ٹکر اور ایراسمس، اکٹھے ہوئے اور آخر کار نو بال کا اشارہ دیا، جو فیصلہ کن ثابت ہوا۔

سابق کرکٹر اور بہت سے پاکستانی شائقین کا خیال تھا کہ کوہلی نے ایراسمس پر دباؤ ڈالا اور نو بال کا اشارہ دیا۔

وقار نے مذکورہ واقعہ کے بارے میں کہا کہ ’’اگر آپ کچھ کہتے ہیں تو آپ ریفری پر دباؤ ڈالتے ہیں، یقیناً ویرات ایک بڑا نام ہے، اس لیے بعض اوقات ریفری دباؤ میں آجاتا ہے‘‘۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

تازہ ترین