ایران سے مزید 100 میگاواٹ بجلی درآمد کی جائے گی۔

3

لاہور:

نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسپیچ کمپنی لمیٹڈ (NTDC) نے پولان سے گوادر تک 29 کلومیٹر طویل ڈبل سرکٹ ٹرانسمیشن لائن پر تعمیراتی کام مکمل کر لیا ہے۔

این ٹی ڈی سی نے کہا کہ یہ کام وزیر اعظم میاں محمد شہباز شریف اور وفاقی وزیر توانائی انگول خرم دستگیر خان کی ہدایات پر مکمل کیا گیا۔

اس کے نتیجے میں خطے میں پاکستان کا ترسیلی نظام ایران سے اضافی 100 میگاواٹ بجلی درآمد کر سکے گا۔

نئی تعمیر شدہ ٹرانسمیشن لائن کی سرکٹ II ٹیسٹنگ اتوار کو مکمل ہو گئی، جبکہ سرکٹ I ٹیسٹنگ 7 فروری 2023 کو ہو گی۔ تاہم، کمپنی نے مزید کہا کہ اگلے چند دنوں میں اضافی 100 میگاواٹ بجلی کے اخراج کا سلسلہ شروع کر دیا جائے گا۔

ایران سے بجلی کی اس اضافی درآمد سے گوادر اور مکران سیکٹرز کے لوگوں کو بجلی کی وافر مقدار اور لوڈ شیڈنگ میں کمی کے حوالے سے فائدہ ہوگا۔ بیان میں کہا گیا کہ اس سے بڑے کاروباری کھلاڑیوں اور گوادر کے علاقے کی طرف سے پیش کردہ مواقع سے فائدہ اٹھانے میں دلچسپی رکھنے والے سرمایہ کاروں کے اعتماد میں بھی اضافہ ہوگا۔

ایکسپریس ٹریبیون، 7 فروری کو شائع ہوا۔ویں، 2023۔

پسند فیس بک پر کاروبار, پیروی @TribuneBiz تازہ ترین رہیں اور ٹویٹر پر گفتگو میں شامل ہوں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

تازہ ترین
اسلام آباد و لورالائی کے ماحولیاتی نمونوں میں پولیو وائرس کی تصدیق عید پر مریضوں و لواحقین کو ناشتہ و کھانا دینگے: لاہور جنرل اسپتال انتظامیہ مویشی منڈی میں بشتر جانور بک گئے فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ، بجلی قیمت میں 3 روپے 41 پیسے اضافے کی درخواست سونے کی فی تولہ قیمت میں 200 روپے کی کمی کراچی میں عید الاضحی سے قبل سبزیوں کی قیمتوں میں اضافہ مقامی طور پر تیار بچوں کے دودھ پر 18 فیصد سیلز ٹیکس لگانے کی تجویز پر غور کون زیادہ گوشت کھاتا ہے! مرد یا خواتین؟ پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں اس مرتبہ کاروباری ہفتہ ریکارڈ ساز رہا ٹی ڈیپ کی زیر سرپرستی 11 پاکستانی کمپنیوں کے وفد کا دورہ ہیوسٹن، تجارتی معاملات پر گفتگو نیپرا نے بجلی کے بنیادی ٹیرف میں 5.72 روپے فی یونٹ اضافے کی منظوری دے دی پیٹرول کی قیمت میں بڑی کمی کردی گئی پاکستان شیئر بازار نے 77 ہزار کی حد عبور کرلی کریڈٹ یا ڈیبٹ کارڈ قبول نہ کرنیوالے دکاندار کا کاروبار سِیل ہو گا: ایف بی آر ڈیفالٹ سے دوچار کمپنیوں کیلئے ریگولرائزیشن اسکیم متعارف