پاکستان کو برآمدات پر مبنی پائیدار ترقی کی ضرورت ہے: اقبال

3

اسلام آباد:

منصوبہ بندی اور ترقی کے وزیر افسن اقبال نے جمعرات کو کہا، "پاکستان کو برآمدات کی قیادت میں پائیدار اقتصادی ترقی کے ذریعے ملکی معیشت کو بحران سے نکالنے کے لیے اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔”

اے پی او کی ڈائمنڈ جوبلی کے موقع پر نیشنل پروڈکٹیوٹی آرگنائزیشن (این پی او) کے زیر اہتمام پیداواریت کی منظوری اور سرٹیفیکیشن پر دو روزہ بین الاقوامی کانفرنس کی اختتامی تقریب میں، انہوں نے اس بات کا اعادہ کیا: برآمدات اور اعلیٰ اقتصادی ترقی۔ "

وزیر نے کہا کہ برآمدات کی سست شرح نمو کی وجہ سے ملک کو اپنے زرمبادلہ کے ذخائر اور ادائیگیوں کے توازن میں طویل عرصے سے بحران کا سامنا ہے۔ "جب بھی جی ڈی پی کی شرح نمو 6 فیصد سے تجاوز کرتی ہے، حکومت کو ڈالر کی کمی کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

2018 میں، مسلم لیگ (ن) کی حکومت نے ایشین پروڈکٹیویٹی آرگنائزیشن (اے پی او) کے تعاون سے ایک پیداواری اقدام کا آغاز کیا جس کا مقصد معیار اور جدت کو فروغ دے کر پیداواری صلاحیت کو بہتر بنانا تھا۔ تاہم، جلد ہی حکومت کی تبدیلی آئی اور اس پہل کو ختم کر دیا گیا، وزیر نے یاد دلایا۔ انہوں نے دلیل دی کہ پائیدار اقتصادی ترقی کا براہ راست تعلق سیاسی استحکام اور پالیسی کے تسلسل سے ہے۔

انہوں نے مزید زور دیا کہ پاکستان صرف زرعی شعبے سے سالانہ 10-12 بلین ڈالر کی اضافی آمدنی حاصل کر سکتا ہے اگر بین الاقوامی فصلوں کی کاشت کی تکنیک کو اپنایا جائے۔

ایک اور تقریب میں وزیر نے کہا کہ پوری دنیا معاشی بحران کا سامنا کر رہی ہے کیونکہ دنیا ابھی بھی کوویڈ 19 وبائی بیماری کی گرفت سے نکل رہی ہے۔

7 اکتوبر کو ایکسپریس ٹریبیون میں شائع ہوا۔ویں، 2022۔

پسند فیس بک پر کاروبار, پیروی @TribuneBiz تازہ ترین رہیں اور ٹویٹر پر گفتگو میں شامل ہوں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

تازہ ترین
سونے کی قیمت میں آج کتنے ہزار کا اضافہ ہوا؟ اس وائرل انفیکشن کی علامات کیا ہیں؟ سونے کی فی تولہ قیمت 1200 روپے کم ہوگئی بلنگ میں بے ضابطگیاں، کے الیکٹرک و ڈسکوز کو انکوائری رپورٹ کی سفارشات پر عملدرآمد کا حکم ڈالر 282 روپے 30 پیسے کا ہو گیا برطانوی ایچ آئی وی ویکسین کی آزمائش کے حوصلہ افزا نتائج آئی ایم ایف کے ساتھ نئے قرض پروگرام کیلئے وزارتِ خزانہ کی ورکنگ نئی حکومت کے ساتھ پالیسیز پر کام کرنے کے منتظر ہیں: ڈائریکٹر آئی ایم ایف پاکستان نئے آئی ایم ایف پروگرام میں 6 ارب ڈالر قرضے کی درخواست کرے گا، بلومبرگ نگراں حکومت کی جانب سے لیے گئے مقامی قرضوں کی تفصیلات جاری خیبر پختونخوا کا آئندہ 4 ماہ کا بجٹ تیار وفاقی کابینہ نے رمضان ریلیف پیکج کی منظوری دیدی سونے کی فی تولہ قیمت 2 لاکھ 15 ہزار کی سطح پر مستحکم پاکستان نے رواں مالی سال کے پہلے 6 ماہ میں 7.3 ارب ڈالر کی ادائیگیاں کیں،اسٹیٹ بینک آئی ایم ایف کے 26 میں سے 25 اہداف پر عملدرآمد مکمل